خام دل کو جلا نہیں ملتی

خام دل کو جلا نہیں ملتی
آگ کو گر ہوا نہیں ملتی
عشق ہے فرض سے کہیں آگے
عشق ہو تو قضا نہیں ملتی
کون کرتا تلاش گُل میں مہک
گر مہک کو صبا نہیں ملتی
تیری دُنیا میں رہ کے دیکھا ہے
بن مُشقت بقا نہیں ملتی
کچھ کہے دُنیا پر حقیقت میں
ننگے سر کو ردا نہیں ملتی
کیا وفا مجھ کو ملتی دُنیا سے
رب کو بھی جب وفا نہیں ملتی

(By Rana Kahif Saleem Arfa)
This entry was posted in Poetry. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s