کسی سے بے سبب الجھا نہیں تھا

کسی سے بے سبب الجھا نہیں تھا
وہ پہلے تو کبھی ایسا نہیں تھا
وہ پھر بھی یاد رہنا چاہتا تھا
اگرچہ میں اسے بھولا نہیں تھا
بہت اعلا تھا اسکا ظرف لیکن
وہ میری زات کو سمجھا نہیں تھا
وہ جیسی بے رخی سے چل پڑا تھا
میں اتنا بھی گیا گزرا نہیں تھا
اسے میں کیوں برا ٹھراؤں یارو
وہ آچھا تھا فقط میرا نہیں تھا

This entry was posted in Poetry. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out /  Change )

Google photo

You are commenting using your Google account. Log Out /  Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out /  Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out /  Change )

Connecting to %s